اک بار بھلانا چاہا تھا سو بار وہ ہم کو یاد آیا

اک بار بھلانا چاہا تھا سو بار وہ ہم کو یاد آیا
اک بھولنے والے کو ہم نے سو بار بھلا کر دیکھا ہے
اس دل کی تمنائیں کیا ہیں اب تک تو ہمیں معلوم نہیں
سو بار ہنسا کر دیکھ لیا سو بار رلا کر دیکھ لیا

Ek Bar Bhulana Chaha Tha So Bar Wo Hum Ko Yad Aayaa
Ek Bhoolney Waley Ko Hum Ne So Bar Bhula Kar Daikha Hai
Iss Dil Ki Tamanayein Kya Hein Ab Tak To Humein Maloom Nahi
So Bar Hansa Kar Daikh Liya So Bar Rula Kar Daikh Liya